دنیا کا سب سے کم عمر تیراک 9 سالہ جیمزنے 3 میل تک تیرکرنیا ریکارڈ قائم کردیا

سان فرانسسکو ( سپورٹس ورلڈ نیوز) کیلیفورنیا کا 9 سالہ بچہ سان فرانسسکو کے ساحل سے تیر کرتین میل دور ایلکیٹراز جزیرے پر پہنچا اور واپس ساحل پر آکر سب کو حیران کردیا کیونکہ وہ دنیا کا سب سے کم عمر تیراک ہے جس نے یہ سفر طے کیا۔14 جون کو اپنا دلچسپ سفرشروع کرنے سے پہلے جیمزسیویج نے کئی روزتک روزانہ پانچ گھنٹے تک تیرنے کی مشق کی اور اس طرح اس نے ایک نیا ریکارڈ قائم کیا۔ اس سے قبل یہ اعزاز سنی ویل کی 10 سالہ انایا خانزادی کے پاس تھا جس نے گزشتہ برس یہ ریکارڈ قائم کیا تھا۔ جیمزنے جب سان فرانسسکو سے ایلیکیٹرازکا سفرشروع کیا تو بارش اورتیز ہواؤں کی وجہ سے سفر کچھ طویل ہوگیا۔
بہترین تیراک ہونے کی وجہ سے جیمز کو ’سپر بطخ‘ کا خطاب بھی دیا گیا ہے جب کہ ان کی والدہ کا کہنا ہے کہ جیمز سخت سردی اور بارش میں بھی تیراکی سے باز نہیں آتا اورکئی کئی گھنٹے تیراکی کرتا رہتا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ 5 سال کی عمر میں وہ سوئمنگ پول کے دونوں کناروں کے درجنوں پھیرے لگالیتا تھا۔ واضح رہے کہ ایلکیٹراز ایک تاریخی جزیرہ ہے جہاں امریکا کی تاریخی جیل واقع تھی اور یہاں ایک لائٹ ہاؤس بھی تعمیر کیا گیا تھا۔