فیڈریشنزکو فنڈز کار کردگی(میڈلز )کی بنیاد پر جاری کریں گے، سوئمنگ فیڈریشن کے فنڈز کا آڈٹ ہوگا،اسلام آباد میں ایک اور آسٹرو ٹرف بچائیں گے, شہباز سینئر اچھا کام کر رہے ہیں:ریاض پیرزادہ

اسلام آباد(سپورٹس ورلڈ نیوز) وفاقی وزیر بین الصوبائی رابطہ ریاض حسین پیرزادہ نے کہا ہے کہ پاکستان سوئمنگ فیڈریشن کے فنڈز کا آڈٹ ہونا چاہیے،وزیر اعظم سے زیادہ میڈلز لینے والی گیمز کو زیادہ فنڈز دینے کی بات کی ہے،دسمبر کے دوسرے ہفتے میں وزیر اعظم سپورٹس یونیورسٹی کا افتتاح کرینگے،فٹبال کے مسائل کے حل کیلئے فیفا کی طرف وفد بھجوائیں گے جبکہ وفاقی دارالحکومت میں ہاکی اکیڈمی کا قیام کرنے جا رہے ہیں ۔یہ بات انہوں نے سینٹ کی قائمہ کمیٹی برائے بین الصوبائی رابطہ کے اجلاس کے دوران کہی۔انہوں نے کہا کہ میں نے صوبوں کو ہدایت کی ہے کہ وہ پاکستان سوئمنگ فیڈریشن کے عہدیداروں کی لسٹوں کی تصدیق کروائی جائے،پی ایس بی کی طرف سے پاکستان سوئمنگ فیڈریشن کو سالانہ 35لاکھ روپے کی گرانٹ دی جاتی ہے،ان فنڈز کا آڈٹ ہونا چاہیئے اور انہیں چارج شیٹ کیا جائے۔چیئر مین کمیٹی سنیٹر سعود مجید نے بھی سوئمنگ کے فنڈز کا آڈٹ کروانے کی ہدایت کر دی۔ بین الاقوامی معاملات کی وجہ سے ہمیں پاکستان اولمپک ایسوسی ایشن کے ایشو پرپیچھے ہٹنا پڑااور سیدعارف حسن تیسری مرتبہ پاکستان اولمپک ایسوسی ایشن کے صدر بن گئے۔ریاض حسین پیرزادہ نے کہا کہ میں نے وزیر اعظم سے بات کی ہے کہ میڈلز حاصل کرنیوالی گیمز کو زیادہ فنڈز دیئے جائیں۔ہائر ایجوکیشن کمیشن کیساتھ ملکر سپورٹس یونیورسٹی بنانے جا رہے ہیں،مختلف ممالک سے کوچز منگوا کر اپنے کوچز تیار کرینگے جبکہ چین کی بڑی یونیورسٹی کیساتھ الحاق کرینگے،ہم نے اس یونیورسٹی کا چارٹر تیار کر لیا ہے،پاکستان سپورٹس بورڈ ہی میں کلاسز کا آغاز ہو گا،دسمبر کے دوسرے ہفتے میں وزیر اعظم اس یونیورسٹی کا افتتاح کرینگے۔انہوں نے کہا کہ فیفا نے پاکستان کے فٹبال پر پابندی عائد کر دی ہے، فٹبال کے حوالے سے ایسا فیصلہ چاہتے ہیں کہ الیکشن کے اختیارات ہمیں مل جائیں،فیفا سے ملاقات کیلئے وفد بھی بھجوائیں گے،ہم اپنے فٹبالر کی مالی مدد کرنا چاہتے ہیں۔ریاض حسین پیرزادہ نے کہا کہ ہاکی کی ترقی کیلئے شہباز سینئر بڑا اچھا کام کر رہے ہیں،وفاقی دارالحکومت میں ہاکی اکیڈمی کا قیام کرنے جا رہے ہیں اس لیئے ہاکی کا ایک اور گراونڈ بنا رہے ہیں،آسٹروٹرف کیلئے ابھی تک فنڈز نہیں ملے۔کامن ویلتھ گیمز کیلئے کھلاڑیوں کی تربیت جاری ہے۔میلوں سے پابندی ہٹا کر روایتی اور پرانی کھیلوں کو بحال کرنا ہوگا ۔کھیلوں کی ترقی ہی سے دہشتگردی کا خاتمہ ہو سکتا ہے۔قبل ازیں سابق رکن اسمبلی کشمالہ طارق نے کہا کہ کامران لاشاری دو مرتبہ پاکستان سوئمنگ فیڈریشن کے صدر بن چکے ہیں اب انہوں نے آئین میں تبدیلی کرکے چیئر مین بن گئے ہیں اور انہوں نے فیڈریشن کے سیکرٹری میجر(ر) ماجد وسیم کو صدر بنا لیا ہے۔10سالوں سے سوئمنگ کا ایک کیمپ بھی نہیں لگ سکا،یہ سوئمر سے کیش لیتے ہیں،2020کی اولمپکس گیمز کیلئے سوئمرز کو ابھی سے تیار کرنا ہوگا۔