پاکستان کرکٹ بورڈ کےبعض منصوبوں کی تحقیقات دوبارہ شروع ، سبحان احمد اور انتخاب عالم ایف آئی اے کےسامنے پیش

اسلام آباد (سپورٹس ورلڈ نیوز) ایف آئی اے نے پاکستان کرکٹ بورڈ کےبعض منصوبوں کی تحقیقات دوبارہ شروع کر دی ہیں، کرکٹ بورڈ کے چیف ایگزیکٹو آفیسر سبحان احمد اور ڈائریکٹر انتخاب عالم ایف آئی اے کےسامنے پیش ہوگئے ، ٹکٹوں کے ریکارڈ کی گمشدگی اور سابق چیئرمین کی لگژری گاڑی کا 43 لاکھ روپے کرایہ جیسےمعاملات بھی کھول دیے گئے۔ ایف آئی اے کے مطابق پی سی بی نے راولپنڈی اسٹیڈیم کی مرمت کےلئےمنظور شدہ ٹینڈر کی مد میں ازخود مزید 13 ملین روپے کا اضافہ کردیا جبکہ اس سے قبل 21 ملین روپے کا ٹینڈر منظور ہواتھا، اس کے علاوہ مختلف کرکٹ سیریز کے ٹکٹوں کی خریداری اور تقسیم کا بھی کوئی ریکارڈ نہیں رکھا گیا۔ بھارتی کرکٹ بورڈ سے ایک میگا ایونٹ پر 19 لاکھ روپے کی ایک ہزار سے زائد ٹکٹوں کی خریداری اور2013ء میں چیمپئنز ٹرافی کے لئے آئی سی سی سے خریدی گئی 24 لاکھ روپے کی ٹکٹوں کا بھی کوئی ریکارڈ نہیں۔ سری لنکا اور آسٹریلیا سیریز کا بھی ریکارڈ غائب ہے ۔ سابق چیئرمین پی سی بی ذکاء اشرف کے لیے کرائے پر لگژری گاڑی لی گئی جس کاکرایہ 43 لاکھ روپے ادا کیا گیا جبکہ گاڑی کی قیمت 60 لاکھ روپے تھی، ایف آئی اے کے تفتیشی آفیسر سجاد مصطفیٰ باجوہ نے پی سی بی کے افسران سبحان احمد ، ڈائریکٹر انتخاب عالم ،جنرل منیجر آپریشنر لاجسٹک اسدمصطفیٰ، منیجر لاجسٹک مقصود احمد اور آفیسر لاجسٹک فاروق بھٹی کو طلب کیا ، ان افسران نے اپنا اپنا بیان ریکارڈ کرادیا ہے ۔ ان افسران کے مطابق لگژری گاڑی کا حصول چیئرمین کا استحقاق ہے ،باقی معاملات کا ریکارڈ وہ سامنے لائیں گے۔