ایشیا کپ 2018 سے متعلق بہت زیادہ توقعات تھیں مگرمایوسی ہوئی،کوچ اور سلیکشن کمیٹی کی انڈراسٹینڈنگ سمجھ نہیں آرہی :شاہد خان آفریدی

کراچی (سپورٹس ورلڈ نیوز) سابق کرکٹرشاہد خان آفریدی نے کہا کہ انہیں ایشیا کپ 2018 سے متعلق بہت زیادہ توقعات تھیں۔ پاکستان کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان شاہد خان آفریدی نے گرین کریسینٹ فاؤنڈیشن کےساتھ مل کراسکول کا افتتاح کردیا۔ اس موقع پر صحافیوں کےسوالات کا جواب دیتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ ایشیا کپ سے متعلق توقعات بہت زیادہ تھیں مگرمایوسی ہوئی ، کوچ اور سلیکشن کمیٹی کی انڈراسٹینڈنگ سمجھ نہیں آرہی۔ شاہد آفریدی نے کہا کہ سرفراز بہترین کپتان ہیں، انہیں ورلڈکپ کے لیے بھی کپتان رہنا چاہیے۔ گرین کریسینٹ فاؤنڈیشن کےمنتظمین کے ہمراہ مستحق افراد کے لیے اسکول کے آغاز پر میڈیا سے بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ پاکستان کا سب سے بڑا مسئلہ تعلیم ہے۔ شاہد خان فاؤنڈیشن اورگرین کریسینٹ فاؤنڈیشن مل کر 2020 تک ملک بھرمیں اسکولز کاجال بچھائیں گے۔ ان کا کہنا تھا کہ چند مہینوں میں 4اسکولوں کا آغاز کردیا گیا ہے، بلوچستان میں اسکولوں کی تعمیر ہمارا بنیادی ہدف ہےجبکہ اسکولز کے ساتھ کھیل کےمیدان بھی بنائے جائیں گے۔ اس کے علاوہ انہوں نے کہا کہ فواد عالم کی کارکردگی بہترین جارہی ہے۔ فواد عالم کو اگر قومی ٹیم میں نہیں لیا تو اے ٹیم میں انہیں شامل کیا جانا چاہیے تھا۔ شاہد آفریدی کا کہنا ہے کہ حکام کو ایک اعلان کےذریعے کھلاڑیوں کے شبہات کو دور کر دینا چاہیے۔