قومی ہاکی ٹیم کے سابق کپتان اولمپیئن شکیل عباسی نے وزیراعظم عمران خان سے موجودہ ہاکی فیڈریشن کو فوری طور پر برطرف کرنے کا مطالبہ کردیا

لاہور ( سپورٹس ورلڈ نیوز) قومی ہاکی ٹیم کے سابق کپتان اولمپیئن شکیل عباسی نے وزیراعظم عمران خان سے موجودہ ہاکی فیڈریشن کو فوری طور پر برطرف کرنے کا مطالبہ کردیا ہے۔ شکیل عباسی کا کہنا ہے کہ قومی کھیل ہاکی کے ساتھ اب مذاق بند ہونا چاہیے، موجودہ ہاکی فیدریشن کا وقت اب ختم ہو گیا اور حکومت نے فنڈز روک کر فیڈریشن کو واضح پیغام دیا ہے کہ اب وہ انہیں مزید برداشت کرنے کے موڈ میں نہیں ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ اب وقت آ گیا ہے کہ صدر پاکستان ہاکی فیڈریشن بریگیڈئیر (ر) خالد سجاد کھوکھر اور سیکریٹری اولمپیئن شہباز سینئر عزت سے استعفیٰ دے کر گھر چلے جائیں اور نئی مینجمنٹ کو کام کرنے کا موقع دیں۔ ایشین گیمز 2010ء کے گولڈ میڈلسٹ اولمپئین شکیل عباسی کا کہنا تھا کہ موجودہ ہاکی فیڈریشن نے قومی کھیل کا جنازہ نکال دیا ہے، ان کے پاس کھلاڑیوں کو ڈیلی الاؤنس دینے کے پیسے نہیں اور اب یہ ورلڈ کپ میں جانے کے لئے بھیک مانگ رہے ہیں۔ سابق کپتان قومی ٹیم نے کہا کہ یہ اُن کا قصور ہے کیوں انہوں نے ورلڈ کپ کے لیے رقم بچا کر نہیں رکھی،کیوں جونیئر ٹیم کو کینیڈا بھیج کر پیسہ لٹایا۔ شکیل عباسی نے کہا کہ قومی کھیل کا یہی حال رہا تو یہ کھیل صرف کتابوں تک محدود رہ جائے گا، فیڈریشن صرف دلاسے دیتی ہے اور کھلاڑی بیچارے ڈیلی الاؤنس کا ہی رونا روتے دکھائی دیتے ہیں جب کہ اعلیٰ عہدیداران عیاشی کر کے گھر چلے جاتے ہیں۔