پاکستان سپر لیگ کی تمام ٹیموں کا حتمی انتخاب مکمل ، چوتھے ایڈیشن کا آغاز 14فروری 2019 کو متحدہ عرب امارات میں ہو گا

خصوصی رپورٹ :اصغر علی مبارک سے
پاکستان سپر لیگ کے چوتھے ایڈیشن کا آغاز 14فروری 2019 کو رنگارنگ افتتاحی تقریب کے ساتھ متحدہ عرب امارات میں ہو گا۔اس سلسلے میں پاکستان سپر لیگ(پی ایس ایل) کے چوتھے ایڈیشن کے لیے ڈرافٹ کا مرحلہ اسلام آباد سرینا هوٹل میں مکمل ہونے کے بعد اختتام پذیر ھوگیا جس کے ساتھ ہی تمام ٹیموں کا 20رکنی اسکواڈ بھی مکمل ہو گیاپاکستان سپر لیگ(پی ایس ایل) ڈرافٹ مرحلے کے دوران گزشتہ ایڈیشن میں آخری نمبر پر رھنے والی دونوں ٹیموں لاہور قلندرز اور چھٹی ٹیم(سابقہ ملتان سلطانز) کو سب سے زیادہ کھلاڑیوں کے انتخاب کا موقع ملا کیونکہ ان دونوں ٹیموں نے متعدد کھلاڑیوں کو اپنے اسکواڈ سے ریلیز کردیا تھا۔ اسلام آباد سرینا هوٹل میں ہونے والے ڈرافٹ کے بعد تمام ٹیموں کو حتمی شکل دی جا چکی ہے جس کی تفصیل کچھ یوں ہے۔لاہور قلندرز میں فخر زمان، محمد حفیظ، اے بی ڈی ویلیئرز(جنوبی افریقہ)، یاسر شاہ، کارلوس بریتھ ویٹ(ویسٹ انڈیز)، کوری اینڈرسن اور اینٹن ڈیوسچ(نیوزی لینڈ)، راھت علی، سندیپ لیمی چین(نیپال)، شاہین شاہ آفریدی، آغا سلمان، سہیل اختر، حسان خان، حارث سہیل، محمد عمران، عمیر مسعود جبکہ سپلیمنٹری کھلاڑیوں میں برینڈن ٹیلر، گوہر علی، اعزاز چیمہ اور حارث رؤف ،چھٹی ٹیم(سابقہ ملتان سلطانز)شعیب ملک(کپتان)، اسٹیون اسمتھ(آسٹریلیا)، شاہد آفریدی، محمد عرفان، جنید خان، جو ڈینلی(انگلینڈ)، شان مسعود، قیس احمد(افغانستان)، نکولس پوران(ویسٹ انڈیز)، محمد عباس، محمد عرفان خان، عمر صدیق، لوری ایونز(انگلینڈ)، نعمان علی، محمد جنید، محمد الیاس جبکہ سپلیمنٹری کھلاڑیوں میں ڈینیئل کرسچن، ٹام مورس، علی شفیق اور شکیل انصر ،کراچی کنگز میں بابر اعظم، محمد عامر، کولن منرو(نیوزی لینڈ)، کون انگرام(جنوبی افریقہ)، عماد وسیم(کپتان)، عثمان شنواری، روی بوپارہ(انگلینڈ)، محمد رضوان، سکندر رضا(زمبابوے)، اویس ضیا، اسامہ میر، آران سمرز(آسٹریلیا)، سہیل خان، افتخار احمد،

علی عمران، ابرار احمد جبکہ سپلیمٹری کھلاڑیوں میں عامر یامین، بین ڈنک، لیام لیونگ اسٹون اور جاہد علی کوئٹہ گلیڈی ایٹرز میں سرفراز احمد(کپتان)، شین واٹسن(آسٹریلیا)، ڈیوین براوو(ویسٹ انڈیز)، سہیل تنویر، محمد نواز، رلی روسو(جنوبی افریقہ)، فواد احمد(آسٹریلیا)، انور علی، سعود شکیل، محمد اصغر، دانش عزیز، احسن علی، غلام مدثر، نسیم شاہ جبکہ سپلیمنٹری کھلاڑیوں میں ہیری گرنی، احمد شہزاد، اعظم خان اور جلت خان ۔پشاور زلمی ٹیم میں وہاب ریاض، حسن علی، کیرون پولارڈ اور ڈیرن سیمی(ویسٹ انڈیز)، کامران اکمل، مصباح الحق، لیام ڈاسن اور ڈیوڈ ملان(انگلینڈ)، عمر امین، عمید آصف، خالد عثمان، وین میڈسن(جنوبی افریقہ)، صہیب مقصود، جمال انور، ثمین گل، نبی گل جبکہ سپلیمنٹری کھلاڑیوں میں وقار سلام خیل، کرس جورڈن، ابتسام شیخ اور سمیع اللہ آفریدی جبکہ دفاعی چمپین اسلام آباد یونائیٹڈ ٹیم میں لیوک رونچی(نیوزی لینڈ)، فہیم اشرف، شاداب خان، محمد سمیع، آصف علی، ای این بیل(انگلینڈ)، رومان رئیس، سمیت پٹیل(انگلینڈ)، فل سالٹ(ویلز)، صاحبزادہ فرحان، ظفر گوہر، وقاص مقصود، حسین طلعت، کیمرون ڈیلپورٹ(جنوبی افریقہ)، محمد موسیٰ، ناصر نواز جبکہ سپلیمنٹری کھلاڑیوں وین پارنیل، ظاہر خان، عماد بٹ، رضوان حسین شامل ہیں پاکستان سپر لیگ کے چوتھے ایڈیشن کا آغاز 14فروری 2019 کو رنگارنگ افتتاحی تقریب کے ساتھ متحدہ عرب امارات میں ہو گا۔قبل ازیں پاکستان کے سب سے بڑے کرکٹ ٹورنامنٹ پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) کے چوتھے ایڈیشن کے لیے ڈرافٹ کا مرحلہ مکمل ہو گیا ہے جہاں اے بی ڈی ویلیئرز، اسٹیو اسمتھ، شاہد آفریدی، مصباح الحق، اور محمد حفیظ جیسے نامور کھلاڑیوں کو مختلف فرنچائزوں نے اپنی ٹیم کا حصہ بنا لیا۔ پی ایس ایل کے چوتھے سیزن کے ڈرافٹ سے قبل تمام فرنچائزز کے مالکان کو اعزاز سے نوازا گیا۔ڈرافٹ کی پلاٹینم کیٹیگری میں سب سے پہلی پک لاہور قلندرز کو ملی جنہوں نے جنوبی افریقہ کے سابق کپتان اے بی ڈi ویلیئرز کو اپنی ٹیم میں منتخب کرلیا۔پلاٹینم کیٹیگری میں ہی چھٹی ٹیم نے آسٹریلیا کے کپتان اسٹیو اسمتھ اور پاکستان کے سابق کپتان شاہد آفریدی کو منتخب کرلیا، کوئٹہ گلیڈی ایٹرز نے ڈووین براوو، لاہور قلندرز نے محمد حفیظ ، پشاور زلمی نے کیرون پولارڈ کو خریدا۔سابق کپتان مصباح الحق کو بھی پی ایس ایل میں جگہ مل گئی اور پشاور زلمی نے ڈائمنڈ کیٹیگری میں سابق کپتان کو خریدا۔ڈائمنڈ کیٹیگری میں لاہور قلندرز نے ورلڈ ٹی ٹوئنٹی کے فائنل کے آخری اوور میں 4 چھکے لگانے والے ویسٹ انڈیز کے کارلوس بریتھ ویٹ کو خرید لیا۔

ڈائمنڈ کیٹیگری میں چھٹی ٹیم نے انگلینڈ کے جو ڈینلی، اسلام آباد یونائیٹڈ نے ای این بیل، لاہور قلندرز نے کوری اینڈرسن کو خرید لیا۔گولڈ کیٹگری میں انگلینڈ کے ڈیوڈ ملان پشاور زلمی، ویسٹ انڈیز کے نیکولس پوران اور افغانستان کے قیس احمد چھٹی ٹیم، زمبابوے کے سکندر رضا کراچی کنگز، انگلینڈ کے فل سالٹ اسلام آباد یونائیٹڈ، آسٹریلیا کے فواد احمد کوئٹہ گلیڈی ایٹرز اور نیپال کے سندیپ لمی چین لاہور قلندرز کا حصہ بن گئے۔سلور کیٹیگری میں اویس ضیا، اسامہ میر اور آسٹریلیا کے ارون سمرز کراچی کنگز، جنوبی افریقہ کے وین میڈسن پشاور زلمی، جنوبی افریقہ کے کیمرون ڈلپرٹ اسلام آباد یونائیٹڈ، دانش عزیز اور احسن علی کوئٹہ گلیڈی ایٹرز، نعمان علی چھٹی ٹیم اور حارث سہیل لاہور قلندرز میں شامل ہوگئے۔سلور کیٹیگری میں ہی پشاور زلمی نے جمال انور، کراچی کنگز نے سہیل خان اور افتخار احمد کو منتخب کیا۔ایمرجنگ کیٹیگری میں لاہور قلندرز نے محمد عمران اور عمیر مسعود، کوئٹہ گلیڈی ایٹرز نے غلام مدثر اور نسیم شاہ، چھٹی ٹیم نے محمد الیاس اور محمد جنید، کراچی کنگز نے علی عمران اور ابرار احمد، پشاور زلمی نے سمین گل اور نبی گل اور اسلام آباد یونائیٹڈ نے محمد موسیٰ اور ناصر نواز کو اپنی ٹیم میں شامل کیا۔سپلیمنٹری کھلاڑیوں کی کیٹیگری میں کراچی کنگز نے عامر یامین، بین ڈنک، لیام لیونگ اسٹون اور جاہد علی کو اپنے اسکواڈ کا حصہ بنایا ہے۔لاہور قلندرز کے سپلیمنٹری کھلاڑیوں میں زمبابوے کے برینڈن ٹیلر، گوہر علی، اعزاز چیمہ اور حارث رؤف شامل ہیں۔سپلیمنٹری کھلاڑیوں کی فہرست میں کوئٹہ گلیڈی ایٹرز نے ہیری گرنی، احمد شہزاد، اعظم خان اور جلت خان کو اسکواڈ میں رکھا ہے۔پشاور زلمی نے وقار سلام خیل، کرس جورڈن، ابتسام شیخ اور سمیع اللہ آفریدی کو سپلیمنٹری کیٹیگری میں رکھا ہے۔

اسلام آباد یونائیٹڈ کے سپلیمنٹری کھلاڑیوں میں وین پارنیل، ظاہر خان، عماد بٹ اور رجوان حسین شامل ہیں۔چھٹی ٹیم نے ڈینیئل کرسچن، ٹام مورس، علی شفیق اور شکیل انصر کو سپلیمنٹری کھلاڑیوں کی فہرست میں شامل کیا۔واضح رہے کہ پاکستان سپر لیگ کے چوتھے ایڈیشن کا آغاز 14فروری 2019 کو رنگارنگ افتتاحی تقریب کے ساتھ متحدہ عرب امارات میں ہوگا۔پچھلے سال کی طرح اس مرتبہ بھی فائنل سمیت پی ایس ایل کے کچھ میچز پاکستان میں منعقد کروائے جائیں گے۔13 نومبر کو تمام ٹیموں نے قواعد کے مطابق ٹیم میں برقرار رکھے جانے والے کھلاڑیوں کی فرست جاری کردی تھی۔گزشتہ برس کی فاتح ٹیم اسلام آباد یونائیٹڈ نے پلاٹینیم کیٹیگری میں شامل تینوں کھلاڑیوں لیوک رونچی، شاداب خان اور فہیم اشرف کو برقرار رکھا۔پشاور زلمی نے پلاٹینیم کیٹیگری میں وہاب ریاض اور حسن علی کو برقرار رکھا جبکہ ڈیرن سیمی اور کامران اکمل پلیئر ایمبیسیڈر کے طور پر ڈائمنڈ کیٹیگری میں موجود رہے۔کراچی کنگز نے پلاٹینیم کیٹیگری میں محمد عامر، بابر اعظم اور کولن منرو کو جبکہ کولن انگرام کو ڈائمنڈ کیٹیگری میں برقرار رکھا۔کوئٹہ گلیڈی ایٹرز میں سرفراز احمد، سنیل نارائن پلاٹینیم کیٹیگری میں جبکہ آسٹریلین آل راؤنڈر شین واٹسن ڈائمنڈ کیٹیگری میں برقرار رہے۔لاہور قلندرز نے پلاٹینیم کیٹیگری میں فخر زمان اور ڈائمنڈ کیٹیگری میں یاسر شاہ کو برقرار رکھا۔پی ایس ایل کی چھٹی ٹیم میں پلاٹینیم کیٹیگری میں شعیب ملک اور ڈائمنڈ کیٹیگری میں محمد عرفان اور جنید خان کو برقرار رکھا۔

واضح رہے کہ چند روز قبل پی سی بی نے شون پراپرٹی بروکرز کی زیر ملکیت فرنچائز ملتان سلطانز کا معاہدہ منسوخ کردیا، جس کے بعد فرنچائز کے تمام تر مالکانہ حقوق واپس پاکستان کرکٹ بورڈ کو منتقل کردیے گئے تھے۔پاکستان کرکٹ بورڈ نے تصدیق کیھے کہ پی ایس ایل کا چوتھا ایڈیشن اپنے وقت پر منعقد ہوگا اور اس میں گزشتہ ایڈیشن کی طرح 6 ٹیمیں ہی شرکت کریں گی۔یاد رہے کہ پی ایس ایل کی چھٹی ٹیم کی بولی کے لیے پاکستان کرکٹ بورڈ نے 5.2ملین ڈالر سالانہ کی بنیادی رقم مختص تھی اور شون گروپ واحد فریق تھا جس نے بولی کے عمل میں حصہ لے کر فرنچائز اپنے نام کر کے اسے ’ملتان سلطان‘ کا نام دیا تھا۔گزشتہ سال ہونے والے پاکستان سپر لیگ کے تیسرے ایڈیشن میں ملتان سلطان نے پہلی مرتبہ شرکت کی تھی لیکن ان کے لیے ایونٹ کی یادیں خوشگوار نہیں رہی تھیں اور ابتدائی میچوں میں کامیابیوں کے بعد مسلسل ناکامیوں کے سبب وہ پلے آف مرحلے میں بھی نہیں پہنچ سکے تھے۔پاکستان سپر لیگ کے چوتھے ایڈیشن کا آغاز 14فروری 2019 کو رنگارنگ افتتاحی تقریب کے ساتھ متحدہ عرب امارات میں ہو گا۔