تازہ ترین
بنیادی صفحہ / والی بال / آل پاکستان والی بال چیمپئن شپ پشاور یونیورسٹی نے جیت لی ،ڈی جی سپورٹس جنید خان نے کھلاڑیوں میں انعامات تقسیم کئے

آل پاکستان والی بال چیمپئن شپ پشاور یونیورسٹی نے جیت لی ،ڈی جی سپورٹس جنید خان نے کھلاڑیوں میں انعامات تقسیم کئے

پشاور ۔22 فروری 2019(سپورٹس ورلڈ نیوز) ڈائریکٹوریٹ آف سپورٹس پشاور یونیورسٹی کے زیر اہتمام آل پاکستان انٹر یونیورسٹی والی بال چیمپئن شپ جیت لی ‘ گزشتہ روز چیمپئن شپ کا فائنل پشاور کے قیوم سپورٹس کمپلیکس کے احاطے میں واقع پشاور کوچنگ سینٹر کے جنمازیم ہال میں منعقد ہوا اس موقع پر ڈائریکٹر جنرل سپورٹس بورڈ خیبر پختونخوا جنید خان مہمان خصوصی تھے ان کے ہمراہ چیف آرگنائزر و ڈائریکٹر سپورٹس پشاور یونیورسٹی بحرکرم ‘ ڈائریکٹر سپورٹس گورنمنٹ کالج پشاور ارشد حسین ‘صوبائی والی بال ایسوسی ایشن کے سیکرٹری جنرل خالد وقار‘یحییٰ خان‘سجاد خان سمیت دیگر شخصیات موجود تھیں‘چیمپئن شپ کے فائنل میں پشاور یونیورسٹی اور یونیورسٹی آف سینٹرل پنجاب کے درمیان انتہائی سنسنی خیز مقابلہ ہوا جس میں پشاور یونیورسٹی نے بہترین کھیل سے 3-2 سے ٹرافی اپنے نام کی ‘

پہلے سیٹ میں پشاور نے 25-23 سے کامیابی حاصل کی ‘دوسرے سیٹ میں سینٹرل پنجاب یونیورسٹی کی ٹیم نے 25-22 سے کامیابی حاصل کرکے کم بیک کیا‘تیسرا سیٹ پشاور نے 25-19 سے جیتا ‘پنجاب نے چوتھا سیٹ 25-22 سے کامیابی حاصل کی جبکہ آخری اورفائنل سیٹ میں پشاور یونیورسٹی نے 15-11 سے کامیابی حاصل کرکے ٹرافی جیت لی ‘قبل ازیں پشاور یونیورسٹی نے پہلے سیمی فائنل میں فیصل آیاد یونیورسٹی کے خلاف کامیابی حاصل کرکے فائنل کے لئے کوالیفائی کیا تھا جبکہ دوسرے سیمی فائنل میں یونیورسٹی آف سینٹرل پنجاب نے یونیورسٹی آف پنجاب لاہور کو پچیس بیس ‘پچیس اکیس‘اٹھارہ پچیس ‘بائیس پچیس اور پندرہ بارہ سے کامیابی حاصل کرکے فائنل کیلئے کوالیفائی کیا تھا‘چیمپئن شپ کے آخری مرحلے میں میزبان یونیورسٹی آف پشاور ‘یونیورسٹی آف سینٹرل پنجاب ‘یونیورسٹی آف صوابی ‘بی یو آئی ٹی ایم ایس کوئٹہ‘سپرئیر یونیورسٹی ‘لاہور ‘یوینورسٹی آف ملاکنڈ‘پونچھ یونیورسٹی کشمیر‘مہران یونیورسٹی سندھ‘یونیورسٹی آف پنجاب‘یونیورسٹی آف سرگودھا‘یونیورسٹی آف آزاد جموں و کشمیر‘یونیورسٹی آف سندھ جامشورہ‘منہاج یونیورسٹی کراچی ‘یونیورسٹی آف ہری پور ‘سرسید یونیورسٹی کراچی اور گورنمنٹ کالج یونیورسٹی فیصل آباد کی ٹیموں نے شامل کیا۔اس موقع پر اپنے خطاب میں ڈی جی سپورٹس جنید خان نے بہترین مقابلوں کے انعقاد پر ڈائریکٹر سپورٹس پشاور یونیورسٹی بحرکرم اور ان کی ٹیم کومبارکباد پیش کی اور امید ظاہر کی کہ آئندہ بھی یہ سلسلہ جاری رہے گا اور ہماری طرف سے انہیں بھرپور سپورٹ حاصل رہے گی ‘ انہوں نے ونر ٹیم کیلئے پچاس ہزار‘رنر اپ اور تیسری پوزیشن کی ٹیم کیلئے چالیس ‘چالیس ہزاراور آرگنائزنگ کمیٹی کیلئے پچاس ہزار روپے نقد کا اعلان کیا ‘انہوں نے کہا کہ ہمارے صوبے میں والی بال کا بہترین ٹیلنٹ موجود ہے اور اس مرتبہ انڈر23 گیمز میں 104تحصیلوں میں والی بال کے مقابلے منعقد ہونگے اور اس سے بہترین کھلاڑیوں کو قومی اور بین الاقوامی مقابلوں کیلئے تیار کریں گے اور ساتھ ہی انہیں تعلیمی سکالر شپ بھی دیں گے ‘انہوں نے کہا کہ خواتین کھلاڑیوں کے تعلیمی سکالرشپس کا اجراء کر دیا گیا ہے جبکہ مردوں کے تعلیمی سکالر شپس کا بھی جلد ہی آغاز کر دیا جائے گا

انہوں نے اعلان کیا کہ آئندہ چار برس میں ایک ہزار گراؤنڈ صوبے میں بنائے جائیں گے اور اس چار سالہ منصوبے پر کام کا آغاز جلد کیا جارہا ہے‘چیف آرگنائزر و ڈائریکٹر سپورٹس بحرکرم نے اپنے خطاب میں ڈی جی سپورٹس جنید خان اور وائس چانسلر پشاور یونیورسٹی پروفیسر ڈاکٹر محمد آصف خان کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے امید ظاہر کی کہ آئندہ بھی ان کا تعاون جاری رہے گا اور وہ کھیلوں کے فروغ و ترقی کے لئے کام کرتے رہیں گے۔