تازہ ترین
بنیادی صفحہ / ہاکی / بوکھلاہٹ یا کچھ اور…؟ پی ایچ ایف کے متنازعہ سیکریٹری جنرل آصف باجوہ نے شہباز سینئر کے نام کے اوپر دستخط کرکے اپنے آپکو باقاعدہ متنازعہ سیکریٹری ثابت کردیا.

بوکھلاہٹ یا کچھ اور…؟ پی ایچ ایف کے متنازعہ سیکریٹری جنرل آصف باجوہ نے شہباز سینئر کے نام کے اوپر دستخط کرکے اپنے آپکو باقاعدہ متنازعہ سیکریٹری ثابت کردیا.

لاہور:9جولائی 19(سپورٹس ورلڈ نیوز) پاکستان ہاکی فیڈریشن کے متنازعہ سیکریٹری جنرل آصف باجوہ نے پی ایچ ایف کی کانگریس میٹنگ کے لیٹر پر شہباز احمد سینئر کے نام کے اوپر دستخط کرکے اپنے آپکو باقاعدہ متنازعہ ثابت کردیا.تفصیلات کے مطابق بوکھلاہٹ کا شکار موجودہ پاکستان ہاکی فیڈریشن کے متنازعہ سیکریٹری جنرل آصف باجوہ نے سیٹ سنبھالتے ہی مسلسل غلطیاں کررہے ہیں.جس کےباعث صوبائی ایسوسی سی ایشنز سمیت حکومتی اور ہاکی حلقے فیڈریشن سے نہ صرف نا خوش ہیں بلکہ مسلسل شدید تحفظات کا بھی اظہار کررہے ہیں. قائمہ کمیٹی برائے بین الصوبائی رابطہ کے گزشتہ اجلاس میں موجودہ متنازعہ سیکریٹری آصف باجوہ سے جب انکی موجودہ قانونی حیثیت اور شہباز احمد سینئر کے استعفی کے بارے میں سوال کیا تو وہ مدلل جواب نہیں دے پائے.شاید انکے ذہن میں قائمہ کمیٹمی سمیت مختلف میڈیا اور ہاکی حلقوں کی جانب سے انکی قانونی حیثیت اور شہباز احمد سینئر کے استعفی کو منظر عام پر لانے کے سوالات کی وجہ سے اتنے بوکھلاہٹ کا شکار ہوگئے کہ پاکستان ہاکی فیڈریشن کی سب سے اہم کانگریس میٹنگ کیلئے جاری کردہ لیٹر میں شہباز احمد سینئر کے نام کے اوپر آصف باجوہ نے نہ صرف دستخط کر ڈالے بلکہ مزکورہ لیٹر منظر عام پر بھی آگیا.جس کی کاپی سپورٹس ورلڈ پی کے ڈاٹ کا م کو بھی موصول ہوگئی.
مختلف ہاکی حلقوں کا کہنا ہے کہ پی ایچ ایف سیکریٹری نے سیٹ سنبھالنے کے بعد اگر دوست نواز پالیسی اور روٹھوں کو منانے کے علاوہ پاکستان ہاکی پر زرا سی بھی توجہ دی ہوتی تو پاکستان ہاکی ٹیم تاریخ میں پہلی بار تنزلی کیساتھ 17 ویں نمبر پر نہیں آتی. غیر آئینی پی ایچ ایف سیکریٹری آصف باجوہ اپنی سیٹ مضبوط کرنے میں اتنے مگن ہیں کہ انہیں پاکستان ہاکی دور کی بات انہیں دستخط کرتے ہوئے نیچے شہباز احمد سینئر کا نام بھی نظر نہیں آیا.چاہے ایف آئی ایچ ایف کی جانب سے جاری کردہ پریس ریلیز کا معاملہ ہو یا پاکستان بھر میں صوبائی سیکریٹری کو اعتماد میں لئے بغیر کوچز کی تعیناتی کا معاملہ پاکستان ہاکی کیلئے باعث شرمندگی کا باعث بنا اب دیکھنا یہ ہے کہ قائمہ کمیٹی برائے رابطہ بین الصوبائی پاکستان ہاکی فیڈریشن کی ناقص پالیسی اور دیگر معاملات ہر آئندہ اجلاس میں کیا فیصلہ لیتی ہے.واضع رہے کانگریس میٹنگ کے حوالے سےسپورٹس ورلڈ پی کے ڈاٹ کام نے ایک روز قبل ہی نیوز نشر کردی تھی.